رفتہ رفتہ ہر پولس والے کو شاعر کردیا


05-02-2016 | ساغرؔ خیامی

رفتہ رفتہ ہر پولس والے کو شاعر کردیا

محفلِ شعرو سخن میں بھیج کر سرکار نے

 

ایک قیدی صبح کو ۔۔ پھانسی لگا کر مرگیا

رات بھرغزلیں سنائیں اس کو تھانیدار نے




پچھلا صفحہ | اگلا صفحہ



شاعر کا مزید کلام
اک شام کسی بزم میں جوتے جو کھوگئے
پائے کا شاعر۔۔۔ ہزار نعمت پروردگار
کنٹرول کر رہی تھیں ٹریفک کا لڑکیاں
اک یار روز لکھتے تھے اک مہ جبیں کو خط
رفتہ رفتہ ہر پولس والے کو شاعر کردیا