اسحاق حسانؔ

مختصر تعارف

نام        :         محمد اسحاق ابن محمد صادق رکن الدین

تخلص    :         حسّانؔ

قلمی نام  :         اسحاق حسّان بھٹکلی

سرزمین بھٹکل کے نوجوان شعراءمیں سے ایک جناب اسحق حسان بھٹکلی ۱۵/مئی ۱۹۷۵ء  کو بمقام کالی کٹ ( کیرلا) پیدا ہوئے  جہاں ان کے والد مع اہل وعیال بغرضِ معاش مقیم تھے ،  ابتدائی تعلیم بھٹکل میں حاصل کی اور اس کے بعدانہوں نے انجمن آرٹس، سائنس اینڈ کامرس کالج بھٹکل سے پی یو سی (سائنس) کی تعلیم مکمل کی ، شعر و ادب کے مطالعہ کا شوق بچپن سے ہی تھا جس  کی بنا پر 90  کی دہائی کی ابتداء میں کچھ تکبندیاں شروع کیں اور یہیں سے ان کی شاعری کا آغاز ہوا ، اپنے  والد محترم کی جانب سے ہمت افزائی اور ان ہی کی صلاح پر نامور شاعر ِ بھٹکل جناب  ڈاکٹر محمد حسین فطرتؔ کی خدمت میں زانوئے تلمذ طئے کیا  اور استادِ محترم کی رہنمائی میں مشق سخن جاری رکھتے ہوئے  بھٹکل کے مقامی مشاعروں میں اپنا کلام سنانے لگے ، ساتھ ہی ساتھ ان کا کلام ملک اور ریاست کے  مؤقر ادبی  جرائد و مجلات میں بھی شائع ہونے لگا ، یوں اہل ذوق اور اہل ادب کی جانب سے پذیرائی نے ان کے ادبی ذوق و شوق کی پرورش اور صالح افکار کی ترویج میں نمایاں  کردار ادا کیا  پر جب کسب معاش کی مشغولیات نے گھیر لیا تو آپ اپنے  ادبی ماحول سے دورہوگئے اور  شعر و سخن  سے جیسے ناطہ ہی ٹوٹ گیا  ،  بہرحال اب دوست احباب کےبار بار کے تقاضوں اور ان کی حوصلہ افزائی کی بدولت دوبارہ  اس جانب متوجہ ہوکر دوبارہ اپنی مشق سخن کا آغاز کیا ہے اور امید ہے کہ ان شاء اللہ ان کا ایک شعری مجموعہ " اُجلی کرن"اور بچوں کے لئے لکھی گئی اصلاحی نظموں کا مجموعہ  جلد ازجلد زیورِ طبع سے آراستہ ہوگا۔


اسحاق حسانؔ کا جملہ کلام
شبنم میں شراروں میں گلشن کی بہاروں میں
اک معجزے سے کم نہیں ہجرت رسول کی
دینِِ حق مشکلوں میں پلتا ہے
نور کس کا ہے چاند تاروں میں

پچھلا صفحہ | اگلا صفحہ